تازہ ترین
صفحہ اول » اہم خبریں » پی آئی اے کو ’بند’ کرنے کیلئے سینیٹرز سے مشاورت طلب

پی آئی اے کو ’بند’ کرنے کیلئے سینیٹرز سے مشاورت طلب

PIA Pakistan International Airlines Breaking News

اسلام آباد: حکومت نے خسارے کا شکار پاکستان انٹرنیشنل ایئرلائنز (پی آئی اے) کو ’دیوالیہ‘ قرار دیتے ہوئے اسے بند کرانے کے لیے قانون سازوں کی مدد طلب کرلی۔ قومی ایئرلائن کی کارکردگی پر سینیٹ کی خصوصی کمیٹی کے سامنے بات کرتے ہوئے وزیراعظم کے مشیر برائے ہوابازی سردار مہتاب عباسی کا کہنا تھا کہ ’پارلیمانی کمیٹی کی یہ سفارش حکومت کو مشکل فیصلہ کرنے میں مدد فراہم کرے گی جو بصورت دیگر مشکل ہے۔

سینیٹ کمیٹی نے اپنے اجلاس میں پی آئی اے کی جانچ پڑتال میں بہتری کے لیے کی جانے والی سفارشات سمیت گذشتہ ماہ کے دوران ہونے والے واقعات پر غور کیا جو ملک اور قومی ایئرلائن دونوں کے لیے بدنامی کا باعث ثابت ہوئے۔

مشیر ہوابازی نے کمیٹی کے سامنے 3 تجاویز رکھیں، پہلی قومی ایئرلائن جس طرح کام کررہی ہے اسی طرح کام کرنے دیا جائے، دوسرا خسارے کا شکار ادارے کو دیوالیہ قرار دے کر بند کردیا جائے یا تیسرا اس کی تعمیر نو کی جائے۔ سردار مہتاب عباسی کا کہنا تھا کہ ‘ہم ایئرلائن کی تعمیر نو کی کوشش میں مصروف ہیں تاہم یہ بہت مشکل کام ہے، جس کی وجہ پی آئی اے میں نظم و ضبط، اعلیٰ سطح کی انتظامیہ، پیشہ وارانہ و ضابطہ اخلاق کے پابند آفیسرز اور احساس ملیکت کی کمی ہے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون/ خبر پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

مصنف: سعید احمد